Shaykh Abdul Quddoos

بسم اللہ الرحمن الرحیم

تعارف

فضیلۃ الشیخ/ عبد القدوس صاحب حفظہ اللہ۔

 

 

(۱) آپ کا اسم گرامی/ عبد القدوس بن محمد نذیر ہے۔ آپ کی ولادت با سعادت ۱۹۴۵ ؁ء میں ہوئی۔

(۲) آپ نے جامعہ سلفیہ بنارس سے ۱۳۸۷ ؁ھ میں سند فراغت حاصل کی۔

(۳) پھر آپ نے ۱۳۹۳ ؁ھ میں جامعہ اسلامیہ مدینہ منورہ سے علوم حدیث میں بی ۔ اے کیا۔

(۴) اس کے بعد آپ نے ۱۳۹۸ ؁ ھ میں جامعہ ام القری مکہ مکرمہ سے علوم حدیث میں ایم۔ اے کی ڈگری حاصل کی۔
مصر وفيت و عمل

(۵) سعودی کے سپریم کورٹ میں مشائخ اور خصوصا سماحۃالشیخ عبد اللہ بن حمید رحمہ اللہ کے ساتھ بحیثیت شرعی باحث کام کیا۔

(۶) ۱۴۱۲ ؁ ھ سے اب ( ۱۴۳۱ ؁ ھ ) تک وزارۃ العدل کے تمام شعبوں میں شیخ بکر ابوزید رحمہ اللہ کے پاس اپنی خدمات انجام دے رہے ہیں۔

(۷) موجودہ وقت بھی سپریم کورٹ میں خدمت انجام دے رہے ہیں۔
علمی ودعوتی خدمات

(۸) فن حدیث وفقہ میں متعدد کتابوں کی تالیف وتحقیق ۔ جو کہ مندرجہ ذیل ہیں:۔
’’احادیث الجمعۃ دراسۃ نقدےۃ وفقھےۃ‘‘ نامی کتاب۔
’’الآداب للبیھقی ‘‘

’’مجمع البحرین للھیثمی‘‘ (۹ جلدوں میں)۔

’’اتحاف المھرۃ ‘‘ (۱۳ جلدوں میں)۔

’’الروض المربع‘‘ (مطبوعۃ مؤسسۃ الرسالۃ)۔

’’ کشاف القناع‘‘ کی تخریج میں بحیثیت ایک مخرج۔ (مطبوعۃ وزارۃ العدل)۔

(۹) ہندوستان ، صوبہ اتر پردیش کے ضلع سدھارتھ نگر میں ۱۴۱۳ ؁ ھ میں ’’مرکز تحفیظ القرآن والدعوۃ‘‘کی تاسیس۔
جس کی مختصر معلومات مرکز کی جانب سے شائع ہونے والے مجلے سے کی جا سکتی ہیں۔

سعودی کے کئی مشائخ نے مرکز کی زیارت کی ہے ۔ ان میں سے ایک ہستی فضیلۃ الشیخ عبد الرحمن بن عبد اللہ آل الشیخ کی ہے جو کہ سعودی سپریم

کورٹ کے سابق امین تھے۔

سعودی کے بعض مشائخ نے مرکز کی مالی تعاون بھی کی ہے ۔ جسکی تفصیل مرکز کی فائل سے حاصل کی جا سکتی ہے۔
وباللہ التوفیق ۔ وصلی اللہ علی نبینا محمد وعلی آلہ وصحبہ اجمعین۔

Dawat-e-Ilallah Ki Fazilat

Saadat Mando Ki Zindagi

Aap ﷺ Ka Akhri Din

Ilm ki fazilat

Meelad-Un-Nabi ﷺ